Ticker

6/recent/ticker-posts

سنیر صحافی ایاز امیر کے بیٹے نے بیوی کو قتل کر دیا

اسلام آباد: تھانہ شہزاد ٹاؤن کے علاقے چک شہزاد پوش میں قتل کا ہولناک واقعہ پیش آیا جس میں سینئر صحافی ایاز امیر کے بیٹے نے اپنی اہلیہ کو قتل کردیا۔  ایکسپریس نیوز کے مطابق ملزم شاہنواز امیر نے فارم ہاؤس نمبر 46 میں اپنی 37 سالہ بیوی سارہ کو بے دردی سے قتل کردیا، ملزم واقعے کے بعد موقع سے فرار ہوگیا تھا تاہم پولیس نے چھاپہ مار کر اسے حراست میں لے کر تھانہ شہزاد ٹاؤن منتقل کردیا۔ . واقعہ کی اطلاع ملتے ہی پولیس کے اعلیٰ افسران اور فرانزک ٹیمیں موقع پر پہنچ گئیں۔ پولیس کا کہنا ہے کہ ملزم نے اپنی بیوی کو سٹیل کے ڈمبل سے مار کر قتل کیا۔  پولیس کے مطابق واقعے کی تحقیقات جاری ہیں جس کے بعد ایف آئی آر درج کی جائے گی اور جو بھی حقائق سامنے آئیں گے اس سے آگاہ کیا جائے گا۔ واضح رہے کہ شاہنواز معروف سینئر صحافی ایاز امیر کے صاحبزادے ہیں جو چک شہزاد میں رہائش پذیر تھے۔ ان کی تیسری شادی کینیڈین نژاد سارہ سے ہوئی۔  ایسا واقعہ کسی کے ساتھ نہیں ہونا چاہیے، ایاز امیر  واقعے کے بعد سینئر صحافی ایاز امیر نے اپنے بیٹے کی رہائش گاہ کے باہر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ یہ ایسا واقعہ ہے جو کسی کے ساتھ نہیں ہونا چاہیے۔ ایک واقعہ ہے۔ صحافی نے سوال کیا کہ آپ کے بیٹے ملزم شاہنواز کے نشے میں دھت ہونے یا نہ ہونے کے بارے میں آپ کیا کہیں گے؟ یہ سب قانونی باتیں ہیں، میں اس پر کچھ نہیں کہوں گا، بس اتنا کہوں گا کہ کسی کو ایسا جھٹکا نہ لگے۔  پوسٹ مارٹم مکمل، موت کی وجہ معلوم نہیں، فرانزک ٹیسٹ کا فیصلہ ادھر پولی کلینک ہسپتال میں متوفی سارہ کا پوسٹ مارٹم مکمل کر لیا گیا، جس کے مطابق مقتولہ سارہ کے جسم کے مختلف حصوں پر زخموں کے نشانات ہیں، پوسٹ مارٹم میں سارہ کے سر پر زخم کی بھی تصدیق ہوئی ہے۔ مارٹم، لیکن سارہ کے قتل کی وجہ فوری طور پر تصدیق کی گئی تھی. تعین نہیں کیا جا سکا.  ذرائع کے مطابق ڈاکٹرز نے سائرہ کی موت کے تعین کے لیے فرانزک ٹیسٹ کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔ سارہ کے جگر، دل، پھیپھڑوں، تلی اور معدے سے نمونے لیے گئے ہیں۔ فرانزک جانچ کے لیے نمونے پنجاب سائنس ایجنسی لاہور بھجوائے جائیں گے۔
اسلام آباد: تھانہ شہزاد ٹاؤن کے علاقے چک شہزاد پوش میں قتل کا ہولناک واقعہ پیش آیا جس میں سینئر صحافی ایاز امیر کے بیٹے نے اپنی اہلیہ کو قتل کردیا۔
ایکسپریس نیوز کے مطابق ملزم شاہنواز امیر نے فارم ہاؤس نمبر 46 میں اپنی 37 سالہ بیوی سارہ کو بے دردی سے قتل کردیا، ملزم واقعے کے بعد موقع سے فرار ہوگیا تھا تاہم پولیس نے چھاپہ مار کر اسے حراست میں لے کر تھانہ شہزاد ٹاؤن منتقل کردیا۔ .
واقعہ کی اطلاع ملتے ہی پولیس کے اعلیٰ افسران اور فرانزک ٹیمیں موقع پر پہنچ گئیں۔ پولیس کا کہنا ہے کہ ملزم نے اپنی بیوی کو سٹیل کے ڈمبل سے مار کر قتل کیا۔

پولیس کے مطابق واقعے کی تحقیقات جاری ہیں جس کے بعد ایف آئی آر درج کی جائے گی اور جو بھی حقائق سامنے آئیں گے اس سے آگاہ کیا جائے گا۔
واضح رہے کہ شاہنواز معروف سینئر صحافی ایاز امیر کے صاحبزادے ہیں جو چک شہزاد میں رہائش پذیر تھے۔ ان کی تیسری شادی کینیڈین نژاد سارہ سے ہوئی۔

ایسا واقعہ کسی کے ساتھ نہیں ہونا چاہیے، ایاز امیر

واقعے کے بعد سینئر صحافی ایاز امیر نے اپنے بیٹے کی رہائش گاہ کے باہر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ یہ ایسا واقعہ ہے جو کسی کے ساتھ نہیں ہونا چاہیے۔ ایک واقعہ ہے۔
صحافی نے سوال کیا کہ آپ کے بیٹے ملزم شاہنواز کے نشے میں دھت ہونے یا نہ ہونے کے بارے میں آپ کیا کہیں گے؟ یہ سب قانونی باتیں ہیں، میں اس پر کچھ نہیں کہوں گا، بس اتنا کہوں گا کہ کسی کو ایسا جھٹکا نہ لگے۔
پوسٹ مارٹم مکمل، موت کی وجہ معلوم نہیں، فرانزک ٹیسٹ کا فیصلہ
ادھر پولی کلینک ہسپتال میں متوفی سارہ کا پوسٹ مارٹم مکمل کر لیا گیا، جس کے مطابق مقتولہ سارہ کے جسم کے مختلف حصوں پر زخموں کے نشانات ہیں، پوسٹ مارٹم میں سارہ کے سر پر زخم کی بھی تصدیق ہوئی ہے۔ مارٹم، لیکن سارہ کے قتل کی وجہ فوری طور پر تصدیق کی گئی تھی. تعین نہیں کیا جا سکا.
ذرائع کے مطابق ڈاکٹرز نے سائرہ کی موت کے تعین کے لیے فرانزک ٹیسٹ کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔ سارہ کے جگر، دل، پھیپھڑوں، تلی اور معدے سے نمونے لیے گئے ہیں۔ فرانزک جانچ کے لیے نمونے پنجاب سائنس ایجنسی لاہور بھجوائے جائیں گے۔

Post a Comment

0 Comments